شہر شہر


  وقت اشاعت: 10 ستمبر 2017

پاکستان کا سوشل اور مین سٹریم میڈیا ان دنوں روہنگیا مسلمانوں کے غم میں بے حال ہے ۔ سوشل میڈیا پر لوگ اپنی عید، حج کی دعاؤں اور مبارک بادوں کے پیغامات میں ان کا تذکرہ کرکے اپنے جذبات کو ٹھنڈا کر رہے ہیں اور خود کو تسلی دے رہے ہیں کہ وہ درد دل رکھنے والے مسلمان ہیں جو اپنے مصیبت زدہ بھائیوں کے غم میں برابر کے شریک ہیں۔ اس ساری بحث کا نچوڑ یہ ہے کہ دنیا بھر میں صرف مسلمان ہی زیر عتاب ہیں۔ اقوام متحدہ مسلمانوں کی مدد نہیں کرتی۔ یہی سلوک اگر کہیں مسیحی کمیونٹی سے ہو رہا ہوتا تو اب تک سلامتی کونسل، نیٹو اور یورپی یونین سب متحرک ہو چکے ہوتے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 08 ستمبر 2017

ہمارے ہاں مغرب کے بارے میں کئی فکری مغالطے پائے جاتے ہیں۔ ان میں ایک مغالطہ یہ ہے کہ مغرب میں لوگ بہت بے حس ہیں۔ ایک دوسرے سے لا تعلق ہیں۔ بے گانہ ہیں۔ خود غرض ہیں۔ مطلب پرست ہیں۔ دوسروں کا دکھ درد محسوس نہیں کرتے ۔ یہ بہت ہی عام مغالطہ ہے جو بڑے پیمانے پر پایا جاتا ہے ۔  بد قسمتی سے ہمارے لکھاری اور دانشور نما لوگ ، جو سماج میں رائے بناتے ہیں، ان کی ایک بڑی اکثریت بھی اس مغالطے کا شکار ہے ، چنانچہ اس کا کھلا اظہار ہم آئے دن بے شمار اخباری کالموں میں پڑھتے ہیں۔ ٹیلی ویژن پر ہونے والی گفتگو میں سنتے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 10 اگست 2017

پاکستان دنیا کا وہ بدقسمت ملک ہے جہاں دو آمریتوں کے درمیانی عرصے کو جمہوریت کہا جاتا ہے۔ اس کلیے کو حقیقت مان لیا جائے تو موجودہ جمہوری دور اپنی طبعی عمر پوری کرنے کے قریب ہے اور سابق وزیر اعظم نواز شریف کی جانب سے نااہلی کے عدالتی فیصلے کو تسلیم کرنے کی بجائے لانگ مارچ سے مزید خدشات جنم لے رہی ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 07 اگست 2017

پانامہ کیس کا فیصلہ آنے سے قبل تحریک انصاف کے قائدین فخریہ دعویٰ کرتے تھے کہ مسلم لیگ (ن) کے چالیس سے زائد اراکین اسمبلی اعلان بغاوت کرکے تحریک انصاف میں آنے کے لئے تیار بیٹھے ہیں جبکہ شیخ رشید ایسے اراکین کی تعداد ساٹھ سے زائد بتاتے تھے۔ ان کا دعویٰ تھے کہ تبدیلی کا ہم سفر بننے والوں میں مخصوص نشستوں پر کامیاب ہونے والوں کی اکثریت ہوگی اور شاید چوہدری نثار اس قافلے کے سالار ہوں گے.

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 28 جولائی 2017

لاہور ہائی کورٹ ملتان بنچ کے جج  جسٹس محمد قاسم خاں اور صدرہائی کورٹ بار ایسو سی ایشن شیر زمان قریشی کے درمیان ایک مقدمے کی سماعت کے دوران تلخی ہوگئی جو اتنی بڑھی کہ جج عدالت سے اٹھ کر اپنے چیمبر میں چلے گئے۔ بار کے صدرقریشی نے وکلا کو جج کے رویے کے خلاف ہڑتال کی کال دے دی، جس کے نتیجے میں ہائی کورٹ اور ماتحت عدالتوں میں کام بند کرا دیا گیا ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 15 جولائی 2017

کشمیر حکمران طبقات کے لیے مداری کا کبوتر ہے ۔ وہ جب چاہیں اسے پٹاری سے نکال کر تماشا دکھاتے ہیں۔ جب چاہیں واپس پٹاری میں بند کر دیتے ہیں۔ بھارتی لکھاری ارون دھتی رائے کی یہ بات مجھے وزیر اعظم محمد نواز شریف کے اس بیان پر یاد آئی جس میں انہوں نے کہا ہے کہ بھارت کو تجارتی راہدری نہیں دی جا سکتی۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 13 جولائی 2017

گیارہ جولائی کو پوری دنیا میں آبادی کا عالمی دن منا یا جاتا ہے ۔ یہ دن 1990  سے باقاعدہ منایا جا تاہے ۔ اس دن کو منانے کا مقصد دنیا میں آبادی اور وسائل میں توازن کی اہمیت کو اجاگر کرنا  اور دنیا کو بڑھتی ہوئی آبادی اور سمٹتے ہوئے وسائل سے پیش آنے والی مشکلات اور چیلنجز سے نمٹنے کے لئے عوام میں شعور و آگہی پیدا کرنا ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 24 جون 2017

افغانستان تیزی سے عدم استحکام کا شکارہورہا ہے ۔ اس کے پورے خطے پرگہرے اثرات مرتب ہورہے ہیں۔ امریکہ کے نائب وزیرخارجہ برائے سیاسی وفوجی معاملات ٹینا کیڈاناو نے کہاکہ پاکستان افغان طالبان کے ساتھ مذاکرات کیلئے اپنا کردار ادا کرے ۔ دوسری طرف پاکستان پرطالبان اورخاص کرحقانی نیٹ ورک کوسپورٹ کرنے کے بھی الزامات لگائے جارہے ہیں۔ لیکن اصل معاملہ افغانستان کی مخدوش ہوتی ہوئی صورتحال ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 04 فروری 2017

مصنف اور کالم نگار طارق فتح کی 'ٹوئٹر ٹائم لائن' پر ہمہ وقت کوئی نہ کوئی سرگرمی جاری رہتی ہے ۔ کبھی وہ کولکتہ پولیس کو’’نامرد‘‘ قرار دیتے ہیں تو کبھی ملاؤں پر الزام دھرتے ہیں کہ وہ ان کی زندگی کے درپے ہیں ۔ انہوں نے یہ دعویٰ بھی کیا کہ 'گوگل میں کام کرنے والے اسلام پسندوں نے ان کی ای میل منسوح کرنے کی کوشش کی ہے'۔  طارق فتح کی یہ سرگرمیاں اور بیانات بھارت میں ان کے موجودہ کردار کا اظہار ہیں جہاں وہ نمایاں تر ین کالم نگار اور دانشور کے طور پر ابھرے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 15 جنوری 2017

ہم اختلاف رائے کا سامنا ٹھیک طرح سے نہیں کرتے ۔ وقت کے ساتھ اس حوالے سے صورت حال خراب سے خراب تر ہوتی جارہی ہے ۔ بات کرنے ، دوسروں کا موقف جاننے ، اسے سمجھنے اور اختلافات کو قبول کرنے کی بجائے ہم مخالف کو خاموش کرانے کی راہ پر چل نکلے ہیں۔

مزید پڑھیں

Praise and prayers for the great people of Turkey

One year ago, this day, the people of Turkey set an example by defending their elected government and President Recep Tayyip Erdogan against military rebels.

Read more

loading...